Home اردو خبرٰیں لیڈی ہیلتھ ورکرز کا مطالبات نہ ماننے کی صورت میں احتجاج کی کال

لیڈی ہیلتھ ورکرز کا مطالبات نہ ماننے کی صورت میں احتجاج کی کال

4 second read
0
0
180

شانگلہ (نمائندہ) لیڈی ہیلتھ ورکرز نے دھمکی دی ہے کہ اگر انہیں فوری طور پر ان کے مطالبے نہیں مانے گئے تو وہ کرونا ویکسینشن اور پولیو مہم سے بائیکاٹ کریں گے۔ گزشتہ روز لیڈی ہیلتھ ورکرز شانگلہ کے شاخ کی جانب سے جاری ایک بیان میں کہاگیا ہے کہ ہمارے صوبائی کابینہ نے متفقہ فیصلہ کیا ہے کہ چونکہ حکومت نے ہم سے وعدہ کیا تھا کہ بجٹ میں پراجیکٹ والے ایل ایچ ڈبلیوز کو ریگولر کرنے کا اعلان کیا جائیگا اور سروس سٹرکچر بھی دی جائیگی مگر صوبائی حکومت کے وعدے ایفا نہ ہوسکے۔ ایل ایچ ڈبلیو ورکرز ایسوسی ایشن کے صوبائی ترجمان شاہد احمد نے بتایا کہ وہ 2اگست کے بعد بھر پور احتجاجی سلسلہ کا آغاز کریں گے اور ہرقسم ڈیوٹی سے بائیکاٹ کریں گے کیونکہ حکومت نے ایل ایچ ڈبلیو کے حقوق مسلسل غضب کئے ہوئے ہیں اور مسلسل ایسی ڈیوٹیاں لی جارہی ہیں جو ان کے جاب ڈسکپریشن میں نہیں ہے۔
یعنی ایل ایچ ڈبلیوز سے نرسز، پیرامیڈیکس، ڈاکٹرز اور ویکسنیٹر کا کام لیا جارہا ہے جو کہ رولز اور پالیسی کی مکمل خلاف ورزی ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ حالیہ بجٹ میں ایل ایچ ڈبلیوز کو مکمل نظر انداز کیا گیا ہے جوکہ سراسر ظلم ہے۔ ترجمان کا کہنا تھا کہ ہم باقاعدہ طور پر احتجاجی تحریک شروع کریں گے اگر حکومت نے ہمارے مطالبات فوری طور پر حل نہ کئے۔ انہوں نے کہاکہ احتجاج پورے صوبے کے تمام اضلاع میں کئے جائیں گے اور ایل ایچ ڈبلیو سڑوکوں پر نکلیں گے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

Leave a Reply

Check Also

وزیر اعلی محمود خان کا ضلع شانگلہ کا دورہ، شانگلہ میں یونیورسٹی کے قیام کا اعلان

پشاور: شانگلہ میں دو ڈگری کالجوں کے قیام اور ڈی ایچ کیو ہسپتال کی اپگریڈیشن کا اعلان کانا …